گؤ دان سے پہلے ۔۔۔ اسلم جمشید پوری

’’گائے، اللہ کی نعمتوں میں سے ایک نعمت ہے۔ جانوروں میں گائے کی اہمیت سے کسے انکار ہے۔ دودھ کے معاملے میں گائے کا جواب نہیں۔ گائے کا دودھ جہاں صحت کے لیے انتہائی مفید ہے، وہیں بہت سی جسمانی بیماریوں کا علاج بھی ہے۔‘‘ ’’اچھا اچھا۔۔۔ ٹھیک ہے۔۔۔ یہ تو بتا آج گائے پر Read more about گؤ دان سے پہلے ۔۔۔ اسلم جمشید پوری[…]

عزت واپسی قانون ۔۔۔ کیفی سنبھلی

قصبے کے سب سے بڑے رئیس چودھری منیر کے پاس ایک دور میں بے حساب دولت تھی۔ آدھے قصبے کا مالک وہ اکیلا تھا۔ ہاتھی نشین بھی تھا۔ جتنا بڑا رئیس، اتنا ہی بڑا عیاش اور بد کار۔ جب کوئی شخص بد کاریوں کا شکار ہو جاتا ہے تو اس کی جاگیر اور دولت خود Read more about عزت واپسی قانون ۔۔۔ کیفی سنبھلی[…]

بلیکِش (Blackish) ۔۔۔ توصیف بریلوی

قہوہ خانے کے سامنے پہنچ کر ہما رک گئی۔ اس نے نظریں اٹھا کر دیکھا سامنے ایک چھوٹی سی حویلی نما عمارت تھی جس کے کنگورے، بلند دروازہ، کھڑکیاں، گنبد اور محرابیں صدیوں پرانی کہانی سنا رہے تھے۔ کچھ سال پہلے تک یہ صرف قہوہ خانہ تھا اب اس میں کئی اضافے ہو گئے تھے۔ Read more about بلیکِش (Blackish) ۔۔۔ توصیف بریلوی[…]

بائیں پہلو کی پسلی ۔۔۔ احمد رشید

اس رنگ منچ پر ایک اور سانحہ رو نما ہوا یہ پہلا ہے نہ آخری۔ میری تخلیق اس بے مانند بے مثل ربّا کی منشا ہے اگر میری مرضی شامل ہوتی تو جسِد خاکی جو اشرف المخلوقات ہے کے بجائے میں زمین پر اُگا ہوا درخت خلق ہوتی جو میرے لئے باعثِ افتخار اس لئے Read more about بائیں پہلو کی پسلی ۔۔۔ احمد رشید[…]

سائیں لوگ ۔۔۔ نجمہ ثاقب

دائی نے خدا بخش کے بیٹے کی آنول کاٹ کے رنگیلے پیڑھے کو آگے سرکایا۔ تو نو مولود کی دادی نے بسم اللہ پڑھ کے سفید اور سیاہ ڈبیوں والا ملتانی کھیس اُس کے اوپر ڈال دیا اور دوپٹے کے پلو میں بندھا لال نوٹ بچے کے سر پہ کالی چھتری بنائے بالوں پر وار Read more about سائیں لوگ ۔۔۔ نجمہ ثاقب[…]

گُم شُدہ شہر کی کہانی ۔۔۔ محمد جمیل اختر

آدھی رات کو اُس نے اپنے گھر کے دروازے پہ دستک دی تو اُسے یوں محسوس ہوا کہ وہ ساری عُمر دستک دیتا رہے گا اور یہ دروازہ کبھی بھی نہیں کھُلے گا۔۔۔ وہ جوان ہو گیا تھا لیکن اُس کا دل پانچ سال کے بچے جیسا تھا، اُس نے بہت چاہا کہ وہ بڑا Read more about گُم شُدہ شہر کی کہانی ۔۔۔ محمد جمیل اختر[…]

سید محمد اشرف کی کہانی روگ کے پاگل ہاتھی اور لکڑ بگھا اور مردے کا سکسر ۔۔۔ مشرف عالم ذوقی

’’ہاں سرکار۔‘‘ وہ رو رہا تھا۔ مرتے مرتے رو رہا تھا۔ گاؤں والے کہہ رہے تھے کہ جنگلی جانوروں کو انہوں نے کبھی روتے نہیں دیکھا، میں نے خود اپنی آنکھوں سے دیکھا کہ سرکار وہ مر رہا تھا، اس کا سینہ زور زور سے ہل رہا تھا اور آنکھوں سے آنسوؤں کی دھار بے Read more about سید محمد اشرف کی کہانی روگ کے پاگل ہاتھی اور لکڑ بگھا اور مردے کا سکسر ۔۔۔ مشرف عالم ذوقی[…]

رشتوں کی تراش ۔۔۔ ڈاکٹر شائستہ فاخری

    برسات کی شام جتنی خوشگوار ہوتی ہے اکثر کمرے کے اندر کی زندگی اتنی ہی گھٹن بھری ہو جاتی ہے۔ کم سے کم مس زرین ناڈیاولا کا سوچنا یہی تھا۔ اس لئے جب ایسی شام میں ان کی سانسیں گھٹنے لگتیں، جی گھبرانے لگتا، کمرے کی تنہائی کاٹنے لگتی، پیارا چھوٹا سا گھر Read more about رشتوں کی تراش ۔۔۔ ڈاکٹر شائستہ فاخری[…]

کھوکھلی کگر ۔۔۔ احمد رشید

’’زندگی میں کبھی کبھی ایسے پل بھی آتے ہیں کہ انسان بے حقیقت پریشان ہو جاتا ہے۔ ‘‘ وہ خود کلام ہوتا ہے اور سوچتا ہے یہ کیسی رات ہے جو اضطراب میں ڈوبی ہوئی ہے۔۔ آلامِ روزگار، نہ غمِ عشق ہے۔۔ آلامِ روزگار ہے نہیں کہ جینے کا مقصد دنیا نہیں اس لیے کبھی Read more about کھوکھلی کگر ۔۔۔ احمد رشید[…]

خالی ڈبے ۔۔۔ فرحانہ صادق

اچھے ماموں سے میرا رشتہ سگے ماموں بھانجی کا نہ تھا۔کبھی چھٹپن میں امی نے انہیں اپنا بھائی بنایا اور مرتے دم تک اس رشتے کو نبھاتی رہیں۔ اگلے زمانے میں منہ بولے رشتوں کی بھی حرمت ہوا کرتی تھی اب تو خیر سگے رشتوں کی بھی نہ رہی۔ اس منہ بولے رشتے کے علاوہ Read more about خالی ڈبے ۔۔۔ فرحانہ صادق[…]